Swat

پی کے 3 سوات، اَب کی بار 18 امیدوار مد مقابل

(باخبر سوات ڈاٹ کام) سوات کی صوبائی اسمبلی کے سب سے اہم اور شہری حلقہ پی کے6 مینگورہ میں اس بار18 امیدوار مد مقابل ہیں، جن میں سے 4 تحریکِ انصاف کے آزاد امیدوار بھی ایک دوسرے کے مدِ مقابل ہیں۔ اس حلقہ سے جماعت اسلامی کے محمد امین، آزاد امیدوار(تحریکِ انصاف) فضل حکیم، آزاد امیدوار(تحریکِ انصاف) محمد زاہد خان عرف باز خان، آزاد امیدوار(تحریکِ انصاف) سعد خان، آزاد امیدوار (تحریکِ انصاف) محمد ابراہیم خان خیل، جے یو آئی کے مولانا حجت اللہ، ن لیگ کے ارشاد علی خان، اے این پی کے عاصم اللہ خان، پی ٹی آئی (پی) کے افتخار احمد باچا، پیپلز پارٹی کے دوست محمد خان اور قومی وطن پارٹی کے ملک عمران کے درمیان مقابلہ ہوگا۔ اس حلقے میں کل رجسٹرڈ وو ٹوں کی تعداد 196511 ہے، جن میں 106561 مرد اور 89950 خواتین ووٹر شامل ہیں۔ 8 فروری کے انتخابات کے لئے اس حلقہ میں 127 پولنگ سٹیشن اور424 پولنگ بوتھ بنائیں جائیں گے۔ اس حلقہ سے 2018ء کے انتخابات میں تحریکِ انصاف کے فضل حکیم نے22497 ووٹ لیکر کامیابی حاصل کی۔ دوسری نمبر پر جماعت اسلامی کے محمد امین نے12621 اور تیسرے نمبر پر ن لیگ کے ارشاد علی خان نے8748 ووٹ حاصل کیا تھا۔ 2013ء کے انتخابات میں اس حلقے سے تحریکِ انصاف کے فضل حکیم نے 18080 ووٹ حاصل کرکے کامیابی حاصل کی تھی۔ دوسرے نمبر پر جماعت اسلامی کے محمد امین نے 11863 اور تیسرے نمبر پر جے یو آئی کے مولانا حجت اللہ نے9410 ووٹ حاصل کیا تھا۔ 2008ء کے انتخابات میں اے این پی کے واجد علی خان نے 4904 ووٹ لیکر کامیابی حاصل کی تھی۔ دوسرے نمبر پر پیپلز پارٹی کے ریاض احمد ایڈوکیٹ نے 3708 اور تیسرے نمبر پر پیپلز پارٹی شیرپاؤ کے رفیع الملک نے 3461 ووٹ حاصل کیا تھا۔ 2002ء کے انتخابات میں اس حلقہ سے ایم ایم اے کے محمد امین نے 15594 ووٹ حاصل کرکے کامیابی حاصل کی تھی۔ دوسرے نمبر پر پیپلز پارٹی شیرپاؤ کے فضل الرحمان نونو نے 5520 اور تیسرے نمبرپر اے این پی کے واجد علی خان نے 4801 ووٹ حاصل کیا تھا۔ اس حلقہ میں مینگورہ شہر اور سیدو شریف کے علاقے شامل ہیں۔

متعلقہ خبریں

تبصرہ کریں